0

اسلام آباد ہائیکورٹ کا پی ٹی آئی سیکریٹریٹ دفتر فوری ڈی سیل کرنے کا حکم

اسلام آباد ہائیکورٹ نے سی ڈے اے کو پی ٹی آئی سیکریٹریٹ دفتر فوری ڈی سیل کرنے کا حکم دے دیا۔
عدالت نے درخواست منظور کرتے ہوئے کہا کہ سی ڈی اے نے پی ٹی آئی مرکزی سیکریٹریٹ سیل کرنے کے آرڈر سے پہلے کوئی نوٹس نہیں جاری کیا، سی ڈی اے نے دفتر سیل کرنے کا آرڈر پی ٹی آئی کو نہیں بھیجا نہ ہی اس کی کاپی بھیجی گئی۔
جسٹس ثمن رفعت امتیاز نے پی ٹی آئی کی درخواست پر محفوظ فیصلہ سنایا۔
عدالت سے جاری تحریری فیصلے میں کہا گیا کہ سی ڈی اے نے 2022 اور 2023 میں سابق مالک کو نوٹس اور پھر شوکاز نوٹس جاری کیا، سی ڈی اے کوئی وضاحت پیش نہ کر سکا کہ نوٹسز پرانے مالک کو کیوں بھیجے جاتے رہے، سب سے اہم یہ ہے کہ نوٹس یا شوکاز نوٹس کی سروس کی کوئی رسید ریکارڈ پر نہیں۔
تحریری فیصلے کے مطابق سی ڈی اے کا بنایا گیا ایک رجسٹر نوٹسز پہنچنے کا کافی ثبوت نہیں ہے، سی ڈی اے نے پی ٹی آئی مرکزی سیکریٹریٹ سیل کرنے کا آرڈر سے پہلے کوئی نوٹس نہیں کیا، سی ڈی اے کا دفتر سیل کرنے کا آرڈر بھی نہ پی ٹی آئی کو لکھا گیا اور نہ کاپی بھیجی گئی۔
عدالت تحریک انصاف کا سیکریٹریٹ فوری ڈی سیل کرنے کا حکم دیتی ہے، مروجہ قوانین کی خلاف ورزی پر سی ڈی اے قانون کے مطابق کارروائی کر سکتا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں